٭ ملک شفقت اللہ ٭

میرا منافع!آف شور کمپنیاں۔۔۔۔تحریر: شفقت اللہ

Shafqat Ullah

ایک عام فہم بات ہے کہ کسی شریف ،امانت دار سچے انسان کو سیاست میں آنے کا کہا جائے تو وہ کوسوں دور بھاگتا ہے گویا عام آدمی کی نظر میں سیاست خاص طور پر پاکستان کی ایک گناہ کبیرہ

یہ ہو کیا رہا ہے؟۔۔۔۔ تحریر:شفقت اللہ

Shafqat Ullah

سنئے حضور !جب تک عوام کے پاس دھاتی کرنسی ہے تب تک کوئی بھی غریب نہیں ہو سکتا اور سب ہماری برابری کریں گے اگر ان پر حکومت کرنی ہے تو ایسا کوئی طریقہ وضع کرو کہ تمام تر مال

قصاص اور عوام کا کردار!۔۔۔۔ تحریر:شفقت اللہ

Shafqat Ullah

ایک مشہور شیکسپئیر کا قول ہے کہ لوگوں کو بیوقوف بنانا نہایت آسان ہے لیکن انہیں اس بات پر آمادہ کرنا کہ انہیں بیوقوف بنایا جا رہا ہے نا ممکن ۔ موجودہ جمہوری حکومت جب پارلیمنٹ میں براجمان ہو ئی

اخلاقی جرأت کا فقدان۔۔۔۔تحریر: شفقت اللہ

Shafqat Ullah

انسان فطری طور پر خطا کا پتلا ہے لیکن اس کے ساتھ ساتھ اللہ تعالیٰ نے انسان کو شعور بھی بخشا ہے کہ کوئی بھی کام کرنے سے پہلے اسکا انجام جان کر قدم اٹھائے ۔اگر پھر بھی کہیں انسان

بھارت نواز امریکہ کی تگ و دو۔۔۔۔ تحریر: شفقت اللہ

Shafqat Ullah

بھارت عصر حاضر میں بہت زیادہ جوہری ہتھیاروں کی پروڈکشن میں ہمہ وقت مشغول ہے اور نت نئے مزائلوں کے تجربات بھی کرتا نظر آتا ہے ادھر امریکہ اور بھارت کے تعلقات بھی نہایت خوشگوار نظر آتے ہیں جسکی وجہ

ملکی بحران اور بیرونی سازشیں !۔۔۔۔ تحریر:شفقت اللہ

Shafqat Ullah

رواں سال پاکستان کیلئے سیاسی ،خارجی اور معاشی سمیت دیگر امور میں اول تاریخ سے ہی بہت بھاری گزر رہا ہے ویسے اگر دیکھا جائے تو جب سے میاں محمد نواز شریف کی حکومت آئی ہے تب سے پاکستان پر

آئنی بحران۔۔۔۔ تحریر: شفقت اللہ

Shafqat Ullah

قرآنی آیات کا مفہوم ہے کہ بے شک انسان خسارے میں ہے۔ایک انسان محنت کرتا ہے اور پیسہ اکٹھا کرتا ہے پھر انسان کہتا ہے میرے پاس ایک گھر ہونا چاہئے جس پر وہ خرچ کرتا ہے ایک دن آ

کرپشن کا خاتمہ ناگزیر۔۔۔۔ تحریر: شفقت اللہ

Shafqat Ullah

مشہور زمانہ کہانی ہے کہ کسی ملک پر ایک بادشاہ حکومت کیا کرتا تھا اور اسکے ملک میں استحصال انتہائی درجہ تک پہنچ چکا تھا جسکی وجہ سے اس ملک کا بادشاہ نہایت اضطراب کا شکار اور کسی ملک کے

خارجی امور پر مضبو ط پالیسی کی ضرورت ہے۔۔۔۔تحریر: شفقت اللہ

Shafqat Ullah

ایران پاکستان کوآزاد ریاست تسلیم کرنے والا سب سے پہلا ملک تھا اور ایران کے ساتھ پاکستان کے تعلقات بھی انتہائی حد تک اچھے رہے ہیں اور سب سے بڑی حب کی بات یہ ہے کہ پاکستان کا قومی ترانہ

بجٹ اور پاناما لیکس۔۔۔۔ تحریر:شفقت اللہ

Shafqat Ullah

ایک مشہور پنجابی محاورہ ہے ؛آپ لڑی ویندی ہائی دوجھیاں نو متیں پئی دیندی ہائی؛وفاقی حکومت اس وقت نام نہاد عوام دوست بجٹ دینے کے قریب ہے جو کہ بنیادی طور پر عوام کو اور زیادہ ذلیل کرنے کے مترادف