داؤد خیل: ایگری ٹیک لمٹیڈ (فارمرلی پاک امریکن فرٹیلائزر) ، گیس بندش کی وجہ سے شدید بحران کی زد میں

Print Friendly, PDF & Email

داؤد خیل: ایگری ٹیک لمٹیڈصوبہ پنجاب کے ”میانوالی” جیسے پسماندہ ضلع میں واقع ہے۔ جو نصف صدی سے زرعی پاکستان میں کھاد کی ضروریات پوری کررہاہے۔اس فیکٹری کے توسیعی منصوبے کا افتتاح 1998ء میں محترم وزیراعظم میاں محمد نواز شریف نے کیا۔ یہ پلانٹ روزانہ تقریباََ 1350 ٹن کھاد تیار کرسکتاہے۔اس سے ملکی ضروریات کے ساتھ ساتھ قیمتی زرِ مبادلہ کی بچت بھی ہوتی ہے۔اسی افادیت کے تناظر میں ECC میں فیصلہ ہوا کہ ایگری ٹیک کو اپریل 2014ء سے ستمبر2014ء تک بلا تعطل گیس کی فراہمی یقینی بنائی جائے گی۔ اس دوران یہ 165000 ٹن تیار کرے گا۔ یہ پلانٹ نومبر 2013ء سے گیس کی عدم فراہمی کی وجہ سے طویل بندش کا شکار ہے، مذکورہ فیصلہ پر بھی ابھی تک عمل درآمد نہیں ہوسکا۔یادرہے کہ یہ پلانٹ ایس این جی پی ایل کے اُس سرکٹ پر واقع ہے جہاں گیس کا پریشر بہت زیادہ ہے۔ فیکٹری کے بندہونے سے گیس لائنز کا پریشر مزیدبڑھ جاتاہے۔ جس کی وجہ سے او جی ڈی سی  کو یومیہ 4.5ایم ایم سی ایف ڈی  گیس اور 500بی پی ڈی  تیل کی کمی کا نقصان اُٹھانا پڑ رہاہے۔ موجودہ صورتِ حال میں تکنیکی لحاظ سے فرٹیلائزر کا یہ واحد پلانٹ ہے جو کم گیس پر چل سکتاہے، اس سے منسلک تما م حکومتی ادارے اس بات سے متفق ہیں۔مثلاََ او جی ڈی سی , ایس این جی پی ایل اور وزارتِ خزانہ وغیرہ ۔اس کے چلنے سے پاور سیکٹر بھی بالکل متاثر نہیں ہوگا۔بلکہ اس کاچلنا ملک کے لیے سود مند ہے۔بصورتِ دیگر اربوں روپے کا یہ قیمتی اثاثہ جس کا افتتاح بھی خود محترم وزیراعظم نے کیا اُنہی کے دور میں تباہی کا شکار ہوجائے گا۔ اس ادارے کے بند ہونے سے جہاں ہزاروں افراد کا روزگار ختم ہوجائے گا وہی لاکھوں لوگ صاف پینے کے پانی،تعلیم اور صحت جیسی بنیادی ضروریات سے محروم ہوجائیں گے۔ ایک جمہوری حکومت کے دور میں جمہور کا یوں تباہی کا شکار ہونا لمحہ فکریہ ہے۔ جناب وزیراعظم میاں محمدنواز شریف صاحب خصوصی شفقت فرماتے ہوئے ہمارے ادارے کو فی الفور گیس فراہم کی جائے جو کہ سسٹم میں موجود ہے۔ مزدوروں اور علاقہ مکینوں کی داد رسی کی جائے ۔
Short URL: http://tinyurl.com/z2v4ayj
QR Code:


Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *