نواز شریف

دوہائی اور رہائی

تحریر: محمد ناصر اقبال خاندنیا کے مہذب معاشروں کے سیاستدان تعمیر ریاست کیلئے سیاست کرتے اوراپنے ہم وطنوں کیلئے نجات دہندہ بن جاتے ہیں مگرہمارے ہاں سیاستدانوں کے روپ میں سرمایہ دار طبقہ ریاست کے ساتھ سیاست جبکہ قومی وقاراور

نہیں چھوڑوں گا

تحریر: الیاس محمدحسینوزیراعظم نے جو کچھ گھوٹکی میں کہا ماضی کے حکمران اسے شاید اپریل فول سمجھ رہے ہیں اس لئے انہوں نے اسے سیریس نہیں لیا حالانکہ عمران خان نے تو بانگِ دہل کہاہے کہ زرداری اور نوازشریف چاہے

نواز شریف کی ضمانت پر رہائی۔۔۔ مقتدر حلقوں کا کردار

تحریر: صاحبزادہ میاں محمد اشرف عاصمی ایڈووکیٹسپریم کورٹ نے نواز شریف کی درخواست ضمانت منظور کرتے ہوئے سابق وزیر اعظم میاں نواز شریف کو 6ہفتے کیلئے ضمانت پر رہا کرنے کا حکم دیا ہے۔ عدالت نے 50لاکھ روپے کے مچلکے

جیل سے رہائی کے بعد نواز شریف گھر پہنچ گئے، والدہ کی گلے لگا کر دعائیں ،شریف فیملی ، قریبی عزیز و اقارب کی جاتی امراء آمد

لاہور: سابق وزیر اعظم و مسلم لیگ (ن) کے قائد محمد نواز شریف سپریم کورٹ کی جانب سے طبی بنیادوں پر چھ ہفتوں کی ضمانت منظور ہونے کے بعد کوٹ لکھپت جیل سے رہائی ملنے پر اپنی رہائشگاہ پہنچ گئے

میاں نواز شریف کی سزا پاکستان کی تاریخ کا سیاہ ترین فیصلہ ہے ، سکینہ شاہین خان

موجودہ حکومت نے پاکستان کی ترقی کے سفر کو سبوتاژ کیا ، معاشی بحران شدت اختیار کر گیا ۔ نام نہاد جمہوری حکومت جبری ہتکھنڈوں سے حق اور سچ کی آواز کو دبانے کی کو شش کر رہی ہے ۔ 

اسلام آباد ہائی کورٹ کے فیصلے میں غلطی ہوئی، چیف جسٹس

321 total views, no views today

زرداری ،نواز اور عمران کی سیاست

تحریر:ڈاکٹر میاں احسان باریآصف علی زرداری ، عمران خان اور نواز شریف تینوں نے ایک دوسرے کے خلاف محاذ آرائیاں شروع کر ڈالی ہیں۔ان کی طرف سے کوچۂ سیاست میں ایک دوسرے کو نیچا دکھانے کیلئے نت نئے حربے اختیار

ڈاکٹرعافیہ کے لیے صرف ایک خط لکھ دو

تحریر: میر افسر امان، کراچی مجھے ایک کالمسٹ ہونے کے ناطے ڈاکٹر عافیہ صدیقی کی والدہ محترمہ عصمت صدیقی صاحبہ کی طرف سے ایک درد بھرا خط، حفیظ خٹک صاحب کالمسٹ نے ای میل کیا۔ یہ خط یقیناً دوسرے کالمسٹ

بیٹا نواز شریف ، وعدہ پورا کرو،عصمت صدیقی

تحریر: حفیظ خٹک انتخابات میں وہ عوام کے سامنے کہا کرتا تھا کہ ڈاکٹر عافیہ صدیقی کو میں واپس لے کر آؤنگا ۔ ڈاکٹر عافیہ صدیقی جو قوم کی بیٹی ہے اور جسے امریکہ نے برسوں سے قید کیا ہوا

نواز شریف صاحب کلبھوشن کے بارے میں بلآخر بول پڑے

تحریر: میر افسر امان، کراچی کلبھوشن یادیو را کے ایجنٹ ایک حاضر بھارتی نیوی آفیسر کو ہمارے خفیہ ایجنسیوں نے بلوچستان میں جاسوسی کرنے کے الزام کی وجہ سے گرفتار کیا تھا۔ جو ابھی تک پاکستان میں قید ہے۔ یہ