٭ سائنس کی خبریں ٭

ایک نئی ’زمین‘ کی دریافت

امریکی خلائی ادارے ناسا کی ٹیلی سکوپ کیپلر نے زمین سے ملتے جلتے ایک سیارے کی دریافت کی ہے۔ کیپلر 452 بی نامی یہ سیارہ اپنے ستارے کے گرد تقریباً زمین جتنے فاصلے پر اپنے مدار میں چکر لگاتا ہے، تاہم

خلائی جہاز اڑنے کے فوراً بعد ہی تباہ ہو گیا

امریکی کمپنی سپیس ایکس کی جانب سے بین الاقوامی خلائی سٹیشن پر بھیجا جانے والا راکٹ گر کر تباہ ہو گیا ہے۔ یہ راکٹ امریکی ریاست فلوریڈا کے علاقے کیپ کیناورل سے خلا میں روانہ کیا گیا لیکن بغیر پائلٹ کے

پلوٹو کے پانچوں چاندوں کی پہلی بار تصاویر

امریکی خلائی ادارے ناسا کا خلائی جہاز ’نیو ہورائزنز‘ ویسے تو جولائی میں پلوٹو کے قریب پہنچے گا، تاہم اس نے ابھی سے بونے سیارے کے تمام معلوم پانچ چاندوں کی تصاویر بھیجنا شروع کر دی ہیں۔ نیو ہورائزنز اب بھی

جنگلی جانور نہ رہے تو کچھ نہ رہے گا

سائنس دانوں نے کہا ہے کہ دنیا میں بڑے جنگلی جانوروں کی آبادی کم ہو رہی ہے جس سے خطہ ارض ’خالی ہوجانے‘ کا خطرہ بڑھ گیا ہے۔ تحقیق کے مطابق پودے کھا کر گزارہ کرنے والے تقریباً 6 فیصد کے

مچھر بھی انسان کو سونگھ کر کاٹتے ہیں

ایک سائنسی تحقیق کے ابتدائی نتائج میں کہا گیا ہے ممکنہ طور پر مچھر اپنے شکار کی جسمانی خوشبو کی وجہ سے اس کی جانب مائل ہوتے ہیں۔ محقیقین نے یہ تحقیق ہُوبُہو نظر آنے والے اور ایک جیسے نہ دکھنے

ملالہ اب خلا میں بھی

امریکی خلائی ادارے ناسا نے ایک سارچے کا نام پاکستان میں طالبان کے حملے میں زخمی ہونے والی طالبہ اور نوبیل انعام یافتہ ملالہ یوسفزئی پر رکھا ہے۔ اس سیارچے کے بارے میں بتایا گیا ہے کہ یہ ’پرنٹر ٹونر‘

کاکروچ کے دماغ میں شفا بھی

کراچی کی آغا خان یونیورسٹی کے محقق ڈاکٹر نوید احمد خان کو جراثیم کی کھوج نے اپنے بچوں کے باتھ روم سے کاکروچ کے دماغ تک پہنچا دیا ہے۔ بائیولوجیکل اینڈ بائیو میڈیکل سائنس کے شعبے پروفیسر نوید احمد خان بتاتے

دنیا میں 2014 میں کاربن کے اخراج میں اضافہ نہیں ہوا

انٹرنیشنل انرجی ایجنسی کے مطابق گزشتہ برس عالمی سطح پر کاربن گیسوں کے اخراج کی سطح میں اضافہ نہیں ہوا ہے۔ ایجنسی کے مطابق یہ گذشتہ 40 برس میں پہلی مرتبہ ہوا ہے کہ کسی اہم اقتصادی بحران کی غیر موجودگی

چاند کی سطح پر 200 کلو میٹر وسیع گڑھا دریافت

سائنسدانوں نے چاند پر زمین کی جانب 200 کلومیٹرگہرا ایک گڑھا دریافت کیا ہے جس کی عمر تقریباً چار ارب سال بتائی جا رہی ہے۔ اس گڑھے کا نام ہوا بازی کی پیش رو خاتون امیلیا ایرہارٹ کی یاد میں