٭ شہزاد حسین بھٹی ٭

کِسے رُوئیں کسے نہُ روئیں

تحریر: شہزاد حسین بھٹیچنددن قبل نیشنل احتساب بیورو نے پنجاب یورنیورسٹی کے سابق وائس چانسلر ڈاکڑ مجاہد کامران اور چند دیگر پروفیسروں کو غبن اور 550 بھرتیوں کے الزام پر گرفتار کیا ۔ معاملہ یہاں تک رہتا تو ٹھیک تھا

شرمندہ کسے ہونا ہے؟

تحریر: شہزاد حسین بھٹیخلیفہ ہارون رشید کے دو بیٹے تھے امین اور مامون ۔دونوں امام کسائی کے شاگرد تھے۔ایک مرتبہ استاد اپنی مجلس سے اْٹھے تو دونوں بھائی جلدی سے استاد کو جوتے پکڑانے کے لیے لپکے۔دونوں میں تکرار ہو

مناسب وقت کا انتظار کیجئے

تحریر : شہزاد حسین بھٹی06 اکتوبر2016 ء کو انگریزی اخبار ڈان میں صحافی سیرل المائڈہ نے وزیر اعظم ہاؤس میں ہونے والے ایک اہم اجلاس کے حوالے سے خبر دی۔ اس خبر میں غیر ریاستی عناصر یا کالعدم تنظیموں کے

پاکستان میں مزدور ڈے کی رسمی تقریبات

تحریر : شہزاد حسین بھٹییکم مئی مزدور ڈے کے حوالے سے ملک بھر میں رسمی تقریبات کا سلسلہ صبح سے شام تک جاری رہا اورنت نئی اور بھانت بھانت کی بولیاں بولی جاتی رہیں۔ مختلف ٹی وی چینلز پر مزدور

قومی کتاب میلہ ۔۔۔۔شاعرہ فرزانہ ناز کی المناک وفات

تحریر: شہزاد حسین بھٹیہر سال 23 اپریل کو دنیا بھر میں کتاب کا عالمی دن منایا جاتا ہے۔ہمارے ہاں کتاب پڑھنے کی عادت دن بدن کم ہوتی جارہی ہے جو انتہائی تشویشناک امر ہے۔ نسل نو کمرشل ازم کی طرف

سیاسی بہروپیئے

تحریر : شہزاد حسین بھٹیمجھے پنجاب حکومت کی پریشانی پر حیرت ہے۔ حجاب کے معاملے پر پنجاب کے صوبائی وزیر برائے اعلیٰ تعلیم سّید رضا علی گیلانی نے بیان کیا جاری کیاایوانِ اقتدار کی غلام گردشوں میں گویا زلزلہ آگیا

خواتین کا عالمی دن اور اناراں بی بی پر تشدد

تحریر: شہزاد حسین بھٹیپاکستان سمیت دنیا بھرمیں خواتین کاعالمی دن آٹھ مارچ کو منایاجاتاہے، اس دن کو منانے کا مقصد خواتین کی اہمیت کو تسلیم کرنا اوران کے حقوق سے متعلق آگاہی فراہم کرنا ہے۔خواتین نے دنیا کے ہر میدان

ٹھیکیدار رکھ لیجئے

تحریر:شہزاد حسین بھٹی اے ایمان والو! بات یہی ہے کہ شراب اور جوا اور تھان اور فال نکالنے کے پانسے سب گندی باتیں، شیطانی کام ہیں ان سے بالکل الگ رہو تاکہ تم فلاح یاب ہو (۱)۔المائدہ۔90 یہ شراب کے

نمائیندے یا لفنگے

تحریر :شہزاد حسین بھٹی خدا تعالی کی طرف سے عوام ، عوام کی طرف سے منتخب نمائیندوں ، منتخب نمائیندوں کی وساطت سے پارلیمینٹ کو کسی ریاست پر حکمرانی کا اختیار ملنے پر پارلیمینٹ اپنی اجتماعی سوچ کی روشنی میں

ریاکاری کا عذاب

تحریر: شہزاد حسین بھٹی شیخ سعدی رحمتہ اللہ فرماتے ہیں کہ ایک ریاکار درویش جس کی درویشی محض دکھاوے کو تھی ایک بار بادشاہ کا مہمان ہوا۔ شاہی دستر خوان بچھا تو بادشاہ پر اپنی کم خوری ظاہر کرنے کے