٭ شاہد اقبال شامی ٭

قائد ہمارا ہے

تحریر: شاہداقبال شامی پاکستان اولیاء کا فیضان ہے ،علماء کی محنتوں کا ثمر ہے،قائداعظم محمد علی جناع کی تربیت علماء حق نے فرمائی،قائداعظم بات کرنے سے پہلے علماء سے مشورہ لیا کرتے تھے۔پاکستان مولانا فضل الرحمن،الیاس قادری،حافظ سعید،سراج الحق اور

قائد ہمارا ہے

تحریر:شاہداقبال شامی پاکستان اولیاء کا فیضان ہے ،علماء کی محنتوں کا ثمر ہے،قائداعظم محمد علی جناع کی تربیت علماء حق نے فرمائی،قائداعظم بات کرنے سے پہلے علماء سے مشورہ لیا کرتے تھے۔پاکستان مولانا فضل الرحمن،الیاس قادری،حافظ سعید،سراج الحق اور ساجد

حلم وفا کا پیکرملک حاکمین خان

تحریر: شاہداقبال شامی وہ13اکتوبر 1999کی ایک چمکتی صبح تھی جب پہلی دفعہ میرے شعور نے آنکھ کھولی گاؤں سے شہر جانے کے لئے اس دن جانے کیوں کوئی گاڑی نہیں تھی تانگہ پر بیٹھ کر عازم سفر ہوا راستہ میں

کچھ علاج اس کابھی

تحریر: شاہداقبال شامی وطن صرف میدانوں،پہاڑوں،دریاؤں اور صحراؤں کا مجموعہ ہی نہیں ہوتابلکہ یہ انسان کے اس مسکن کا نام ہے جہاں آزادی کی ہوائیں چلتی ہیں،جہاں عدل و انصاف کے چشمے ابلتے ہیں اور جہاں انسانیت ظالموں اور مظلوموں

بے حس معاشرہ

تحریر: شاہداقبال شامی گھر معاشرہ حتیٰ کہ ملک بھی تباہ و برباد ہوجاتے ہیں جب ان سے عدل وانصاف کا دامن ہاتھ سے چھوٹ جاتاہے،تباہ وبربادی سے مراد صرف یہ نہیں کہ ملک میں خانہ جنگی ہو،امن ندارت ہوجائے،اشیاء صرف

دھرنا سسٹم

تحریر: شاہد اقبال شامی پاکستان کی موجودہ صورتحال ناگفتہ بہ ہے ہر کوئی اپنے مفاد کیلئے کو شاں ہیں ،اپنے مفاد حاصل کرنے کے لیئے ہر حد پھلانگنے کے لیئے تیارہے عوام کی خدمت کی دعوے دار جماعتیں بھی یہ

صرف محرم ہی میں کیوں؟

تحریر: شاہداقبال شامی عاشورہ کا دن یہودیوں کے نزدیک بھی متبرک ہے اور وہ اس دن کو روزہ رکھا کرتے تھے ،اللہ کے آخری نبیﷺ نے فرمایا تھا کہ”میں اگراگلے سال اگر زندہ رہا تو میں دوروزے رکھو گاتا کہ

سیدنا عمر فاروقؓ کی زندگی اک نظرمیں

تحریر: شاہداقبال شامی دنیا میں کچھ لوگ ایسے بھی آئے جنہوں نے اپنی دانشمندی،عمل پیہم،جرات وبہادری اورلازوال قربانیوں سے ایسی تاریخ رقم کر گئے کہ قیامت تک ان کے کارنامے لکھے اورپڑھے جاتے رہیں،ان ہی میں سے ایک شخصیت جن

گستاخان نبیؐ کوبتلادو!۔۔۔۔ تحریر: شاہداقبال شامی

دنیا میں 4قیمتی چیزیں جومحبت کے قابل ہیں، مال، جان،آبرو اور ایمان۔لیکن جب جان پرکوئی مصیبت آجائے تو مال کو قربان کردینا چائیے اورآبرو پر آفت آٹپکے توجان اور مال دونوں لگا دینا چائیے اور اگر ایمان پر زد پڑنے

پولیس قانون سے بالاتر کیوں؟۔۔۔۔ تحریر: شاہداقبال شامی

ہمارے ملک کی پولیس اپنے منفی رویے کی وجہ سے مشہور ہے ہمارے معاشرے میں ان کو اچھی نگاہ سے نہیں دیکھا جاتا لوگ ان کو دیکھ کر اپنا راستہ بدل لیتے ہیں اور ان کے ساتھ تعاون کم ہی