٭ میر افسر امان ٭

عمران خان ،مدینہ کی اسلامی ریاست، اس کے وزیر

تحریر: میر افسر اماناس میں شک کی کوئی گنجائش نہیں کہ وزیر اعظم، مملکت اسلامی جمہوریہ پاکستان ، مثل مدینہ اسلامی ریاست، عمران خان صاحب جب سے سیاست میں آئے ہیں وہ پاکستان کی اساس کو سامنے رکھتے ہوئے اور

قائد اعظم ؒ امت مسلمہ کا عظیم لیڈر

تحریر: میر افسر امانکچھ لوگ اپنی اپنی قوموں میں واقعی عظیم ہوتے ہیں۔ امت مسلمہ کے لیے بانیِ پاکستان قائد اعظم محمد علی جنا ح ؒ عظیم لیڈرہیں۔ دوسری طرف شاعر اسلام ،علامہ شیخ محمد اقبالؒ ،جو جدید تعلیم یافتہ

کشمیری شہدا کے پاکستانی پرچم میں لپٹے ۱۴؍ جنازے اورپاکستان

تحریر: میر افسر امانمقبوضہ کشمیر میں ظلم ،سفاکیت، خون زیزی اور نسل کشی کی انتہا ہو گئی ہے۔ ظلم کے خلاف اپنے جائز احتجاج کے لیے بھارتی سفاک قابض فوج پر پتھر پیھکنے پر ایک ہی جگہ ۱۴؍ کشمیری انسانی

سانحہ مشرقی پاکستان۔ دو قومی لڑائی

تحریر: میر افسر امانہم جس برصغیر میں رہتے ہیں، دنیا اِسے سونے کی چڑیا سے منسوب کرتی آئی ہے۔ اسی لیے یہاں غالب قومیں آتی رہیں اور اس خطے سے مستفید ہوتی رہیں۔زیاد ہ دُور نہیں جاتے، برصغیر کی قدیم

مذہبی آزادی کا بہانہ۔ امریکہ نے پاکستان کو بلیک لسٹ کر دیا

تحریر: میر افسر امانعیسائیوں نے مسلمانوں پر اپنی شیطانی تہذیب کو مسلط کرنے کے لیے مختلف طریقے اور قانون بنا رکھے ہیں۔ اس سے قبل اسی قانون کے تحت امریکا، مسلمان ملک سعودی عرب،ایران ا ور سوڈان کوبلیک لسٹ میں

معیار حق کون ہے

تحریر: میر افسر امانمیرے سامنے تبصرے کے لیے جو کتاب ہے اس کا پہلا نام’’کیا جماعت اسلامی حق پر ہے‘‘ جس کو مولانا عبدالرحیم اشرفؒ نے ۱۹۵۶ء کو فیصل آباد سے شائع کیا تھا۔ اسی نام سے اس کا دوسرا

۔12 ؍کروڑ حمائیتی

تحریر: میر افسر امانہر کسی کو اپنے مذہب سے والہانہ لگاؤ ہوتا ہے۔اس طرح سکھ بھی اپنے مذہب سے والہانہ محبت کرتے ہیں۔وہ پون صدی سے بھارت کے باڈر سے اپنے مذہبی پیشوا بابا گروناناک کے مزار، کرتارپور ناروال کو

امرسادھنا

تحریر: میر افسر امانمجھے یہ دیکھ کر ازحد خوشی ہوئی کہ میرے آبائی شہر حضرو کے ایک صاحب قلم نے، قلمی نام ’’نوید بن اشرف‘‘ کے تحت ایک ناول’’ امر سادھنا‘‘ لکھا ہے۔ حضرو کے اہل علم نے بتایا کہ

عمران خان صاحب اسلامی جمہوریہ پاکستان کو انتشار سے بچائیں!

تحریر: میر افسر امانآسیہ ملعونہ کی قید سے رہائی کے سپریم کورٹ کے فیصلہ کے خلاف ملک میں دینی جماعتوں نے عوام کی ترجمانی کرتے ہوئے بھر پور ملک گیر احتجاج کیا تھا ۔ حکومت نے دانشمندی سے دینی جماعتوں

بین القوامی سیرت البنیؐ کانفرنس

تحریر: میر افسر امانحکومت پاکستان کی وزارت مذہبی امور و بین المذاہب ہم آہنگی کی دو روزہ بین الاقوامی سیرت کانفرنس النبیؐ کانفرنس، بعنوان ختم بنوتؐ اور مسلمانوں کی ذمہ داریاں۔۔تعلیمات بنویؐ کی روشنی میں۔ ۲۰،۲۱ نومبر ۲۰۱۸ء جناح کنونشن