٭ ایم پی خان ٭

طوفان بدتمیزی

تحریر: ایم پی خان گذشتہ دنوں اردوادب کے مطالعہ کے دوران اردوکے مشہورناؤل نگاررتن ناتھ سرشارکاناؤل ’’طوفان بدتمیزی‘‘نظرسے گزرا۔اس ناؤل سے متعلق تحقیق کرنے اورمعلومات حاصل کرنے کی خاطرانٹرنیٹ پر گوگل میں تلاش شروع کردی ۔گوگل میں تلاش کے بعدایک

کبھی بہ حیلہ مذہب ،کبھی بنام وطن

تحریر: ایم پی خان امیرشہرہمیشہ غریبوں کولوٹ لیتاہے۔یہ کوئی نئی بات نہیں بلکہ ہردورمیں یہ طبقاتی اوراستحصالی نظام کسی نہ کسی شکل میں موجودرہتاہے اوراس نظام کے خلاف آوازاٹھانے والے باغی گردانے جاتے ہیں ۔پوری مشینری بغاوت کوکچلنے کے لئے

ناخدائے سخن اورتا ج الشعراء، نوح ناروی

تحریر: ایم پی خان ناخدائے سخن، تاج الشعراء فصیح العصر منشی ومولوی محمدنوح صاحب 18ستمبر 1879کو اترپردیش رائے بریلی میں پیداہوئے۔ابتدائی تعلیم حافظ قدرت علی اورمولوی یوسف علی صاحب سے حاصل کی۔ اسکے بعدکچھ عرصہ عبدالرحمن جائسی اورپھر فارسی اورعربی

پاکستان ، دنیا کی بہترین شکارگاہ

تحریر: ایم پی خان یہ کوئی انوکھی بات نہیں ہے کہ عرب شہزادے پاکستان میں تلورکے شکارکے لئے آتے ہیں لیکن حالیہ دنوں میں قطرکے شہزادوں کاپاکستان میں تلورکاشکار میڈیاکاسب سے اہم موضوع بن گیا ہے۔ ایک طرف سپریم کورٹ

پاک ترک سکول اورحکومت پاکستان کا دوٹوک موقف

تحریر: ایم پی خان پاکستان اورترکی کے درمیان اچھے اوردوستانہ تعلقات کافی پرانے ہیں۔ دونوں ممالک ایکدوسرے کے اتنے قریب ہیں کہ بظاہر دوممالک نظرآتے ہیں اورحقیقت میں ایک قوم کااحساس ہوتاہے۔ایک طرف دونوں ممالک کی حکومتوں کے درمیان سیاسی،

پشتو ڈرامے اورفلمیں ، نئی نسل کے لئے زہرقاتل

تحریر: ایم پی خان ایک زمانہ تھاجب پی ٹی وی پر اردواورمقامی زبانوں میں معیاری پروگرام پیش کئے جاتے تھے ۔ان کی نشریات میں ڈراموں، موسیقی اورحالات حاضرہ کے پروگراموں میں معیارکاخیال رکھاجاتاتھا۔اسکے علاوہ دینی ، معاشی ، معاشرتی اورسیاسی

جمہوریت کوکچھ نہیں ہوگا، پہلے پاکستان بچاؤ

تحریر: ایم پی خان ہردورمیں حکمران جماعت کایہی موقف ہوتاہے کہ جمہوریت کو خطرہ ہے اورجمہوریت بچانے کے لئے وہ کسی بھی حد تک جاسکتی ہے۔اصل میں جمہوریت کیاہے اورجمہوریت غیرمستحکم ہونے سے ریاست کو کیانقصان ہوسکتاہے، یہ بہت لمبی

ہیں اوربھی گوہرنایاب، ان چائے والوں میں

تحریر: ایم پی خان راتوں رات شہرت کی بلندی پر پہنچنے والا ارشد،ایک عام ہوٹل میں چائے بنانے کاکام کرتاتھا۔وہ تب بھی چائے والا تھا،جب وہ پہلے پہل اپنے سارے سپنے اورسہانے خواب دوتین سوروپے یومیہ اجرت پر بیچ کر

عالمی دن برائے دیہی خواتین

تحریر: ایم پی خان پوری دنیامیں ہرسال 15اکتوبرکو دیہی خواتین کاعالمی دن منایاجاتاہے۔دیہی خواتین کاعالمی دن 18دسمبر 2007کو جنرل اسمبلی نے مشترکہ طورپر منظورکرکے ، پہلی دفعہ 15اکتوبر1980کومنایاگیا ۔اس دن کامقصددیہی خواتین کی خدمات اورمعاشرے کی تعمیر وتشکیل اورملک کی

یوم قومی زبان۔۔۔۔ تحریر: ایم پی خان

8ستمبر2016کو پاکستان میں پہلی دفعہ یوم قومی زبان منایاگیا۔ قومی زبان منانے کے لئے پاکستان قومی زبان تحریک کے عہدیداروں اورکارکنوں نے تقریبات کااہتمام کیا۔اس سلسلے میں مرکزی تقریب لاہورکے الحمراہال میں منعقد ہوئی جبکہ علاقائی اورصوبائی سطح پر چھوٹی