٭ ڈاکٹر احسان باری ٭

پرانے راگ اور نئے سازندے؟

تحریر: ڈاکٹر میاں احسان باری جنوبی پنجا ب کے چھ قومی اور دو صوبائی اسمبلیوں کے ممبران نے اسمبلیوں سے استعفیٰ دے کر جنوبی پنجاب صوبہ محاذ کے نام سے نئی تنظیم قائم کر لی ہے اس میں سابقہ ریاست

دہشت گردی کیوں جاری ہے؟

تحریر: ڈاکٹر میاں احسان باری2سال تک تومسلسل فوجی عدالتیں تیزی سے خصوصی مقدمات کا فیصلہ کرتی رہی ہیں اورشہیدوں کے خاندان کے سپوت جناب راحیل شریف کے دور میں دہشت گردی کا خاتمہ ہوتا نظر آرہا تھا مگر جونہی فوجی

کیا تیز سماعتی عدا لتیں ہی اصل حل ہیں؟

تحریر:ڈاکٹر میاں احسان باری فوجی عدالتوں کا قضیہ پھر اٹھ پڑا ہے یہ خصوصی عدالتیں 6جنوری2015کو اکیسویںآئینی ترمیم کے ذریعے دو سال کے لیے قائم ہوئیں۔جن کا 7جنوری 2017کوٹائم فریم ختم ہو گیا۔ اس دوران آرمی پبلک سکول کے سانحہ

تشہیر پسند سیاسی لیڈر

تحریر:ڈاکٹر میاں احسان باری مسلسل 70سالوں سے مغربیت کے پیرو کار مقتدر سیاست دان لٹیرے اپنی ذاتی تشہیر کے بھوکے ہیںآج تک کے حکمران بیرونی سیکولر سامراجی ممالک ،ورلڈ بنک ،آئی ایم ایف سے ڈھیروں سود در سود پرقرضے لیکر

گراں فروشوں کی عید

تحریر: ڈاکٹر میاں احسان باری عید کے معنی ہی خوشی کے ہیں مسلمانوں کے لیے دو عیدین کے تہوار انتہائی انبساط اور خوشیوں کا باعث ہوتے ہیں مگر گراں فروشوں نے تو امسال عید الاضحی کی خوشیوں کو اپنے تئیں

عید قربان پھر آگئی

تحریر ڈاکٹر میاں احسان باری عید قربان مسلمانوں کا وہ تہوار ہے جو کہ حضرت ابراہیم ؑ کی طرف سے خواب میں خدا تعالیٰ کی جانب سے اپنی سب سے پیاری اور قیمتی چیز کو قربان کرڈالنے کے بموجب ان

آہ شاہ فیصل شہید

تحریر :ڈاکٹر میاں احسان باریسامراجی ملک خواہ کتنے ہی طاقتور کیوں نہ ہو جائیں اور یہود ونصاریٰ و اسرائیل ان کی مدد کے لیے ہمیشہ ہی برسر پیکار رہیں مگر اسلام دشمنوں کی اندرونی بزدلی انھیں مسلمانوں کے مقابلے میں

قیام پاکستان پر سازشوں کے جال

تحریر:ڈاکٹر میاں احسان باریپاکستان کا تصور حکیم الامت علامہ محمد اقبال نےٍ پیش کیا تھا مگر انہوں نے واشگاف الفاظ میں امت مسلمہ کو یہود ونصاریٰ کی مکروہ سازش فتنۂ قادیانیت سے خبر دار کرتے ہوئے فرمایا تھا کہ”قادیانیت یہودیت

کھودا پہاڑنکلا چوہا

تحریر :ڈاکٹر میاں احسان باریچند روز قبل پراپیگنڈے کا طوفان برپا رہا کہ معیشت مستحکم ہوچکی ہے۔ اس لیے بجٹ عوام دوست ہوگا مگر “واردات”اس کے بالکل الٹ کرڈالی گئی ہے۔بجٹ مایوسی کی دکھ بھری داستان اور غریب عوام پر

اوراب ہم کہاں کھڑے ہیں؟

تحریر :ڈاکٹر میاں احسان باریحکومتی ترجمان اور سرکاری حلقے ہمیشہ یہ تاثر دیتے رہتے ہیں کہ موجودہ حکومت کا کلہ بہت مضبوط ہے مگر ہمارے ہاں چونکہ اکثر انتخابی عمل سے نہیں بلکہ بیرونی عالمی سامراج حکمرانی کی منشاء کے