٭ حفیظ اللہ شیرانی ٭

نیچے اتر کے تو آ۔۔۔۔ تحریر: حفیظ اللہ شیرانی

سب بے بس دیکھ رہے تھے کوئی کچھ نہیں کہہ رہا تھا۔ کہتے تو کیا کہتے کرتے تو کیا کرتے ؟کیونکہ سب دوست قلم اور سفید کاغذ ساتھ لے کر دنیا کے سامنے یہی بے بسی تولانا چاہ رہے تھے